Pakistan has requested Saudi Arabia to include Chinese vaccines to its list of approved COVID-19 shots.

Pakistan has requested Saudi Arabia to include Chinese vaccines to its list of approved COVID-19 shots for visitors traveling to the kingdom to perform Hajj and Umrah, foreign office spokesperson Zahid Hafeez Chaudhri said on Saturday.

“Pakistan has taken up with the Kingdom of Saudi Arabia, the issue of vaccines which are mandatory for travel to Saudi Arabia for visit, Umrah and Hajj,” Chaudhri said in response to media queries on the issue. “We have proposed inclusion of some of the Chinese vaccines used in Pakistan in the list of vaccines approved by the Saudi authorities.”

“The Ministry [of Foreign Affairs] is actively pursuing this matter with the Saudi side,” he continued.

Saudi Arabia’s new vaccine condition has raised questions for Pakistani nationals who intend to visit the kingdom for pilgrimage or other purposes.

According to media reports, people who have not been administered Pfizer, AstraZeneca, Moderna or Johnson and Johnson shots may need to quarantine themselves for a substantial period on arriving in Saudi Arabia.

Pakistan has mostly administered Chinese vaccines to its citizens in a government-run immunization campaign that began last February.

The country only started using AstraZeneca to inoculate its citizens after receiving 1.2 million doses of the vaccine earlier this month under the World Health Organization’s COVAX program for equitable distribution of COVID-19 shots among developing nations.

Hundreds of thousands of Pakistanis visit Saudi Arabia annually, mostly for pilgrimage. The kingdom is also home to a large Pakistani diaspora community that makes the largest contribution to its homeland’s incoming remittances every year.

ترجمان دفتر خارجہ زاہد حفیظ چوہدری نے ہفتہ کو بتایا کہ پاکستان نے سعودی عرب سے درخواست کی ہے کہ وہ حج اور عمرہ کرنے کے لئے مملکت کا سفر کرنے والے زائرین کے لئے منظور شدہ کواڈ 19 شاٹس کی اپنی فہرست میں چینی ویکسین شامل کرے۔ اس معاملے پر میڈیا کے سوالات کے جواب میں بتایا کہ ہم نے پاکستان میں استعمال ہونے والی چینی ویکسین میں سے کچھ کو سعودی حکام کی طرف سے منظور شدہ ویکسین کی فہرست میں شامل کرنے کی تجویز دی ہے۔ سعودی عرب کی نئی ویکسین کی شرط نے پاکستانی شہریوں کے لئے سوالات اٹھائے ہیں جو حجاج کرام یا دیگر مقاصد کے لئے مملکت کا دورہ کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق جن لوگوں کو Pfizer، Astrazeneca، Moderna یا جانسن اور جانسن شاٹس کا انتظام نہیں کیا گیا ہے، انہیں سعودی عرب پہنچنے پر کافی مدت تک خود کو Quarantine کرنے کی ضرورت پڑسکتی ہے۔ پاکستان نے گزشتہ فروری سے شروع ہونے والی حکومت کی جانب سے حفاظتی ٹیکوں کی مہم میں زیادہ تر اپنے شہریوں کو چینی ویکسین لگائی ہے۔ ملک نے صرف ترقی پذیر قوموں کے درمیان COVID-19 شاٹس کی منصفانہ تقسیم کے لئے عالمی ادارہ صحت کے COVAX پروگرام کے تحت ویکسین کی 1.2 ملین خوراکیں حاصل کرنے کے بعد اپنے شہریوں کو انوکولیٹ کرنے کے لئے Astrazeneca کا استعمال شروع کیا۔ سالانہ سینکڑوں ہزاروں پاکستانی سعودی عرب کا دورہ کرتے ہیں، زیادہ تر زیارت کے لئے۔ بادشاہی بھی ایک بڑی پاکستانی ڈائسپورا کمیونٹی کے گھر ہے جو ہر سال اپنے وطن کی آنے والی ترسیلات میں سب سے بڑی شراکت کرتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *